فیصل آباد(آن لائن)پاکستان مسلم لیگ ن پنجاب کے صدروممبر قومی اسمبلی رانا ثنا اللہ خان نے کہاہے کہ دو سو ارب ڈالر پاکستان واپس لانے والوں نے پاکستان کوIMFکا غلام بنا دیا ہے۔آئے دن ہر چیز پر ٹیکس نے ملکی معیشت کا بیڑہ غرق کر دیا۔تاجر سے لیکر مزدور تک سب پریشان ہیں

۔کوئی پوچھنے والا نہیں کبھی چینی سکینڈل،کبھی آٹا سکینڈل اور اب ملک میں گیس نام کی کوئی چیز نہیں۔غریب لوگوں کے چولہے ٹھنڈے پڑے ہیں۔ادویات غریب آدمی کی پہنچ سے دور ہو چکی ہے۔نا اہل اور نالائقوں نے نیا پاکستان بنانے کی بجائے پرانے کا بھی بیڑ ہ غرق کر دیا ہے۔یہ بات انہوں نے تاجر برادری کی تقریب حلف برداری سے خطاب کرتے ہوئے کہی۔اس موقع پررانا علی عباس (MPA)،میاں عرفان منان،رانا نوید خاں اور حاجی محمد رمضان نے بھی خطاب کیا۔مقررین نے خطاب میں کہا کہ موجودہ حکومت نے تاجروں کے لئے سوائے ٹیکس دو کے علاوہ کوئی پالیسی نہیں بنائی۔کام کرنا اداروں نے مشکل کر دیا ہے۔بجلی کے بلوں کی ادائیگی بہت مشکل ہو چکی ہے۔جس سے ملکی معیشت کو ناقابل تلافی نقصان ہو رہا ہے۔وزیر مشیر سب اچھا کی رٹ میں مصروف ہیں۔جبکہ حقیقت اس کے بر عکس ہے۔انہوں نے مزید کہاکہ ملک میں خوشخالی کا ایک ہی نشان ہے جو کہ میاں محمد نواز شریف ہے۔ ان کادور حکومت تاجربرادری کے لئے سنہری دور تھا۔حکومت چلانا موجودہ وزیراعظم کے بس کی بات نہیں۔

شیئر کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں