مسلم لیگ ن حکومت پنجاب کے ساتھ نمٹنے کیلئے تیار، لیگی رہنما احسن اقبال نے ٹویٹ پر بتادیا، احسن اقبال نے بتایا کہ مسلم لیگ ن نے مرکزی سیکرٹریٹ ، ایچ 180، ماڈل ٹاؤن، لاہور میں حکومت پنجاب کی طرف سے کی جانے والی انتقامی کارروائیوں کیلئے مانیٹرنگ کا سیل قائم کر لیا ہے،جو سرکاری افسران اپنی پیشہ وارانہ ڈیوٹی سے بڑھ کر کر پی ٹی آئی حکومت کے ورکر بنے ہوئے ہیں ان کے کوائف اور کاروائیوں کی تفصیل مع ثبوت بھیجی جائیں-جس پر معاون خصوصی شہباز گل نے کہا کہ چیف سیکرٹری پنجاب کو اس پر ایکشن لینا چاہئے اور اسے کارے سرکار میں مداخلت اور سرکاری ملازمین کے خلاف دھمکی سمجھنا چاہئے۔ اس پر فوری قانونی کارروائی کر کے پنجاب میں ایک اور الطاف حسین گروپ کی تشکیل کو فوری روکنا چاہئے۔ شہباز گل نے احسن اقبال کو منافق اور جھوٹا قرار دیا تھا،جبکہ آئی ایم ایف کے پروگرام کے حوالے سے احسن قبال نے حکومت پر تنقید کی تو شہباز گل نے جوابی وار میں احسن اقبال پر طنر کے تیز برسائے تھے،انہوں نے کہا تھا کہ یہ کیسی مضبوط معیشت اور جی ڈی پی چھوڑ کر گئے تھے کہ ارسطو صاحب فرما رہے تھے کہ پی ٹی آئی کو حکومت سنبھالتے ہی آئی ایم ایف کے پاس قرض کے لیے چلے جانا چاہئے تھا۔

شیئر کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں