کل حافظ سعد رضوی کی گرفتاری کے بعد پورے ملک میں مظاہرے جاری ہیں.

کل جمیعت علمااسلام نے بھی تحریک کی حمایت کا اعلان کیاتھا

آج حکومت کی جانب سے ایک اور بڑی کاروائی کی گئی ہے.

مانسہرہ جمعیت العلمائے اسلام (ف) کے مرکزی رہنما رہنمامفتی کفایت ﷲ کے آبائی گھر پر پولیس نے چھاپہ ماراہے۔پولیس نے مفتی کفایت ﷲ کے آبائی گھر سے ان کے بھائی،بہنوئی اور بیٹے کو حراست میں لے لیا ہے۔میڈیارپورٹس کے مطابق مفتی کفایت اللہ کے خاندانی ذرائع نے بتایا ہے کہ پولیس نے مفتی کفایت ﷲ کے آبائی گھر واقع ہفہ ترنگڑی،مانسہرہ میں چھاپہ مار کر ان کے بھائی، بہنوئی اوربیٹے کوحراست میں لے لیا ہے۔ وفاقی حکومت نے مفتی کفایتﷲ کے اداروں کے خلاف بیانات پرکارروائی کافیصلہ کیا تھا۔ وفاقی وزارت داخلہ کو مفتی کفایت ﷲ کے خلاف مقدمہ درج کرنے کی ہدایت بھی کی گئی تھی۔

شیئر کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں