مشہور پروفیسر اور امریکی خارجہ پالیسی کے بڑے ناقدنوم چومسکی کا کہنا ہے کہ سابق وزیراعظم عمران خان کیخلاف امریکی سازش کا کوئی ٹھوس ثبوت نہیں، دھمکی آمیزخط کو سازش کا ثبوت قراردینا بلاجواز ہے۔

تفصیلات کے مطابق نوم چومسکی نے اپنے بلاگ میں لکھا کہ دنیا بھر میں کسی بھی سرگرمی کو امریکی خفیہ ایجنسی (سی آئی اے )یا مغربی منصوبے سے منسوب کرنے کا رجحان ہے، سابق پاکستانی وزیر اعظم کیخلاف بغاوت کے اس دعوے کا کوئی بامقصد ثبوت نظر نہیں آیا۔



مشہور دانشورکا کہنا تھاکہ پاکستان کے امریکہ میں سابق سفیراسد مجید کی کیبل کوئی ٹھوس ثبوت نہیں۔انہوں نے بھارت کے حوالے سے بھی کہا کہ بھارت کرتارپور راہداری کے حوالے سے غلط بیانی سے گریز کرے اور اپنی مذہبی اقلیتوں اورعبادت گاہوں کے تحفظ کویقینی بنانے کیلئے اقدامات کرے۔

شیئر کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں