ذرائع نے ایکسپریس ٹریبیون کو بتایا کہ وزارت منصوبہ بندی نے نئے زمینی حقائق کو مدنظر رکھتے ہوئے وفاقی وزیر منصوبہ بندی احسن اقبال کو بریفنگ دی کہ سیاسی قیادت کی تبدیلی اور محدود مالیاتی وسائل بڑے منصوبوں کیلیے فنڈنگ کی اجازت نہیں دیتے۔





ذرائع نے بتایا کہ وزارت نے احسن اقبال کو تجویز دی کہ کم اخراجات اور صوبائی نوعیت کے منصوبوں کو پبلک سیکٹر ڈویلپمنٹ پروگرام (پی ایس ڈی پی) سے خارج کر دیا جائے، وزارت کی تجویز کے مطابق 2.3 ٹریلین روپے کی مجموعی لاگت والی کل 764 اسکیموں کو پی ایس ڈی پی سے خارج کردینا چاہیے۔اس وقت 1169 سکیمیں پی ایس ڈی پی کا حصہ ہیں جن کی لاگت 6.3 ٹریلین روپے ہے۔


وزارت نے کل اسکیموں کا 65 فیصد بند کرنے سفارش کی ہے جس سے مجموعی طور پر پی ایس ڈی پی کی فنانسنگ میں 36 فیصد کمی ہو گی۔

شیئر کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں