متحدہ عرب امارات نے پاکستان میں سرمایہ کاری کے لیے 10 بلین ڈالر مختص

 

متحدہ عرب امارات نے پاکستان میں سرمایہ کاری کے لیے 10 بلین ڈالر مختص کیے ہیں، جس میں انفارمیشن ٹیکنالوجی، توانائی، سیاحت، پورٹ آپریشنز، فوڈ سیکیورٹی، کمیونیکیشن، معدنیات، اور بینکنگ اور مالیاتی خدمات جیسے شعبوں کو ہدف بنایا گیا ہے۔ سرمایہ کاری کا یہ وعدہ شیخ محمد بن زید النہیان نے ابوظہبی میں وزیر اعظم شہباز شریف سے ملاقات کے دوران کیا۔ متحدہ عرب امارات کی سرکاری خبر رساں ایجنسی، ڈبلیو اے ایم نے رپورٹ کیا کہ اماراتی صدر نے وزیراعظم نواز شریف کو مکمل اقتصادی تعاون کی یقین دہانی کرائی، جس کا مقصد پاکستان کی معیشت کو مضبوط بنانا اور دو طرفہ تعاون کو بڑھانا ہے۔

 

وزیر اعظم شہباز شریف نے یو اے ای کے ساتھ آئی ٹی، قابل تجدید توانائی اور سیاحت میں تعاون کو فروغ دینے اور پاکستان کے اندر مختلف شعبوں میں متحدہ عرب امارات کی سرمایہ کاری کے نفاذ کو یقینی بنانے کے عزم کا اعادہ کیا۔ ملاقات کے دوران وزیراعظم نے اماراتی صدر سے شیخ تہنون بن محمد النہیان اور شیخ حزہ بن سلطان النہیان کے انتقال پر تعزیت بھی کی۔

 

یو اے ای کے ایک روزہ دورے پر وزیراعظم کے ہمراہ نائب وزیراعظم اسحاق ڈار، وزیر تجارت جام کمال خان، وزیر دفاع خواجہ آصف، وزیر اطلاعات عطاء اللہ تارڑ اور معاون خصوصی طارق فاطمی بھی تھے۔ یہ دورہ وزیر اعظم نواز شریف کا عہدہ سنبھالنے کے بعد متحدہ عرب امارات کا پہلا دورہ ہے۔

 

شیئر کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں