حکومت نے پی ٹی آئی کو مذاکرات کی نئی تجویز پیش کردی

حکومت نے پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کو مذاکرات کی ایک اور پیشکش میں توسیع کرتے ہوئے یہ شرط رکھی ہے کہ پی ٹی آئی سڑکوں سے نکل کر پارلیمنٹ میں آئے اور 2029 تک انتظار کرے اپوزیشن کے طور پر کام کرے۔

 

وفاقی وزیر احسن اقبال نے کہا کہ حکومت بامعنی بات چیت کے لیے تیار ہے، تاہم انہوں نے اس بات پر زور دیا کہ قوم 9 مئی کے واقعات کو نظر انداز نہیں کر سکتی۔

 

قائم مقام صدر یوسف رضا گیلانی نے ایوان صدر سے پی ٹی آئی کو ایک پیغام پہنچایا، جس میں اس بات پر روشنی ڈالی گئی کہ پاکستان پیپلز پارٹی (پی پی پی) شمولیت کے لیے تیار ہے اور پی ٹی آئی کو فیصلہ کرنا چاہیے کہ وہ کس سے مذاکرات کرنا چاہتے ہیں۔

 

یوسف رضا گیلانی نے پاکستان مسلم لیگ (ن) کے ساتھ وفاقی اور پنجاب دونوں سطحوں پر کابینہ میں شمولیت کے حوالے سے جاری بات چیت کا ذکر کیا۔ انہوں نے یقین دلایا کہ پیپلز پارٹی عوامی مفاد کے تمام معاملات میں حکومت کی حمایت کرتی ہے اور اس اتحاد سے غداری نہیں کرے گی۔

شیئر کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں