اسلام آباد ہائی کورٹ نے ایف آئی اے کو بیرسٹر گوہر، رؤف حسن کے خلاف کارروائی سے روک دیا۔

 

اسلام آباد ہائی کورٹ نے فیڈرل انویسٹیگیشن ایجنسی (ایف آئی اے) کو پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے چیئرمین بیرسٹر گوہر اور ترجمان رؤف حسن کے خلاف تادیبی کارروائی سے روک دیا ہے۔

 

اسلام آباد ہائی کورٹ کے جسٹس محسن اختر کیانی نے پی ٹی آئی کے بانی کے ایکس ہینڈل سے شیخ مجیب الرحمن کے متعلق پوسٹ کے کیس میں ایف آئی اے کے نوٹس کے خلاف تحریری حکم جاری کیا۔

 

عدالت نے بیرسٹر گوہر اور رؤف حسن کو ایف آئی اے کے سامنے پیش ہونے کی ہدایت دی اور حکم دیا کہ ایف آئی اے نہ تو ان کو ہراساں کرے اور نہ ہی ان کے خلاف کوئی تادیبی کارروائی کرے۔

 

عدالت نے پی ٹی آئی کے رہنماؤں بیرسٹر گوہر اور رؤف حسن کو ایف آئی اے کے سامنے پیش ہو کر اپنا بیان ریکارڈ کرنے کی ہدایت دی۔ اس کے ساتھ ہی ایف آئی اے کو نوٹس جاری کیا اور 25 جون تک جواب طلب کیا۔

شیئر کریں

اپنا تبصرہ بھیجیں